(New Hope for Bhopal Gas Victims)بھوپال گیس سانحہ

[ 0 ] September 17, 2012

بھارتی شہر بھوپال میں امریکی کمپنی کے پلانٹ سے پیش آنیوالا گیس سانحہ دنیا کے چند بڑے صنعتی سانحات میں سے ایک مانا جاتا ہے۔اس واقعے کے برسوں بعد بھی آلودہ ہوا اور پانی کے باعث لوگوں کو مشکلات کا سامنا ہے، تاہم گزشتہ ماہ بھارتی سپریم کورٹ نے حکومت کو تمام زہریلا مواد تلف کرنے کا حکم دیا ہے۔

ریحانہ بھوپال کے علاقے Atal Ayub میں واقع اپنے گھر میں ہینڈپمپ سے پانی سے نکال رہی ہیں۔ یہ علاقہ امریکی کمپنی Union Carbide کی اس کیڑے مار ادویات تیار کرنے والی فیکٹری کے ساتھ ہے، جہاں 1984ءمیں گیس حادثہ پیش آیا تھا۔ ہینڈ پمپ سے نکلنے والا پانی زرد اور بدبودار ہے۔

ریحانہ(female) “ہم Union Carbide کے باعث آلودہ ہونے والا پانی پینے پر مجبور ہیں۔ ہم حکومت سے صاف پانی کی فراہم کا مطالبہ کرتے ہیں، اس آلودہ پانی کے باعث بچوں کو مسائل کا سامنا ہے۔ یہاں بچے پیدائشی معذوریوں کے ساتھ پیدا ہتے ہیں، جبکہ متعدد خواتین کینسر کے مرض میں مبتلا ہوچکی ہیں”۔

اس فیکٹری کے ارگرد تیس ہزار سے زائد افراد رہائش پذیر ہیں۔ایک بھارتی ادارے کی تحقیق کے مطابق اس علاقے میں پانی میں زہریلا مواد عالمی طے کردہ معیار سے چالیس گنا زائد ہے۔

1984ءکی امریکی ٹی وی سی این این کی وڈیو میں فیکٹری سے گیس کو خارج ہوتے دکھایا جارہا ہے۔اس حادثے کے دوران فیکٹری سے چالیس ٹن زہریلی گیس خارج ہوئی، جس کے نتیجے میں سات ہزار افراد فوری طور پر ہلاک ہوگئے، جبکہ لاکھوں افراد مختلف امراض کا شکار ہوکر گزشتہ برسوں میں مرچکے ہیں۔ اس سانحے کے اٹھائیس سال بعد بھی زیرزمین پانی زہریلا ہے۔علاقے کی ایک رہائشی رشیدہ بی کا کہنا ہے کہ صرف پانی ہی مسئلہ نہیں۔

رشیدہ(female) “اس فیکٹری کے ارگرد رہنے والی لڑکیاں شادی کے بعد بہت مشکل سے ماں بن پاتی ہیں، اگر ان کے ہاں بچے کی پیدائش ہوبھی جائے تو بھی ان میں پیدائشی طور پر کئی مسائل ہوتے ہیں۔ اکثر لوگ تو ان لڑکیوں سے شادی کیلئے ہی تیار نہیں ہوتے،یہی وجہ ہے کہ صرف لڑکیاں ہی نہیں والدین کوبھی مشکلات کا سامنا ہوتا ہے”۔

تین سال قبل ایک فلاحی ادارے Sambhavna Trust نے اس علاقے میں رہائش پذیر بیس ہزار افراد پر ایک تحقیق کی، جس سے معلوم ہوا کہ یہاں پیدائشی معذوریوں کی شرح خطرناک حد تک بڑھ چکی ہے، ایک اور تحقیق کے مطابق یہاں پیدا ہونے والے ہر پچیس میں سے ایک بچہ بالائی لب کے بغیر پیدا ہوتا ہے، ان کے سر چھوٹے ہوتے ہیں جبکہ دیگر پیدائشی معذوریاں بھی عام ہیں۔ Rachna Dhingra ایک این جی او Bhopal Group of Information and Action کیلئے کام کرتی ہیں۔

رچنا(female) “امریکی فیکٹری کی شمالی سمت میں رہنے والے پچیس ہزار سے زائد افراد تاحال آلودہ پانی پینے پر مجبور ہیں۔ اس پانی میں ایسے خطرناک کیمیکل موجود ہیں جو خون کے کینسر اور خون میں پائے جانے والے سفید ذرات کی کمی کا سبب بنتے ہیں۔ اس کے علاوہ اس پانی میں مختلف زہریلی دھاتیں بھی شامل ہیں جو پیدائشی معذوریوں کا سبب بنتی ہیں”۔

زہریلے پانی کے خلاف کئی برسوں سے عوام کی جانب سے احتجاج ہورہا ہے مگر اس حوالے سے سرکاری طور پر خاموشی ہے۔ تاہم گزشتہ ماہ بھارتی سپریم کورٹ نے حکومت کو چھ ماہ کے اندر زہریلا مواد تلف کرنے کا حکم سنایا، مگر اب تک حکومت کی جانب سے کوئی اقدام دیکھنے میں نہیں آیا۔رواں سال کے شروع میں ایک جرمن کمپنی نے زہریلا مواد تلف کرنے کی پیشکش کی تھی۔گیس سانحے و بحالی نو کے ریاستی وزیر Babulal Gaur نے حکومت کو یہ پیشکش قبول کرنے کی تجویز دی ہے۔

 (male) Babulal Gaur “مدھیہ پردیش حکومت مرکز کو ایک مراسلہ بھیجے گی، جس کے بعد محکمہ petrochemicals باقی کام کی نگرانی کرے گا۔ ہم غیرملکی ادارے کے ساتھ براہ راست اس کام میں شامل نہیں ہوں گے”۔

اس سلسلے میں حکومت امریکی کمپنی Dow Chemical سے صفائی کے اخراجات لینا چاہتی ہے، اس کمپنی نے دس برس قبل Union Carbid کو خرید لیا تھا۔ عبدالجبار ایک این جی او کے سربراہ ہیں، جو برسوں سے گیس سانحے کے متاثرین کیلئے جدوجہد کررہی ہے۔

عبدالجبار(male) “امریکی کمپنی کی فیکٹری میں اب بھی ہزاروں ٹن زہریلا مواد پڑا ہوا ہے، ہم جرمن کمپنی کی جانب سے زہریلا مواد تلف کرنے کی پیشکش کے خلاف نہیں، تاہم ہم چاہتے ہیں کہ صفائی کے اخراجات Dow Chemicals سے حاصل کئے جائیں”۔

بھوپال کے عوام صفائی کے علاوہ دیگر مطالبات بھی کررہے ہیں، Sambhavna Trust سے تعلق رکھنے والے Satinath Sarangi اس بارے میں بتارہے ہیں۔

 (male) Satinath Sarangi “امریکہ میں ڈاﺅ کیمیکل نے Union Carbide کی مختلف فیکٹریوں میں حادثات سے متاثر ہونے والے افراد کو معاوضہ ادا کیا ہے، ڈاﺅ کیمیکل نے ان تمام حادثات کی ذمہ داری بھی قبول کی، تاہم بھوپال کے معاملے میں وہ ایسا کرنے سے منکر ہے”۔

Category: Asia Calling | ایشیا کالنگ, Social Issues

Leave a Reply

burberry pas cher burberry soldes longchamp pas cher longchamp pas cher polo ralph lauren pas cher nike tn pas cher nike tn nike tn pas cher air max 90 pas cher air max pas cher roshe run pas cher nike huarache pas cher nike tn pas cher louboutin pas cher louboutin soldes mbt pas cher mbt pas cher hermes pas cher hollister pas cher hollister paris herve leger pas cher michael kors pas cher remy hair extensions clip in hair extensions mbt outlet vanessa bruno pas cher vanessa bruno pas cher vanessa bruno pas cher ralph lauren pas cher